طلبہ کو پرنسپل کی جانب سے ھاسٹل خالی کرنے کے احکامات جاری کردیئے

میرپورخاص (ایم وی این نیوز بیورو رپورٹ ) میرپورخاص گورمینٹ گرلز ابن رشد کالج کے حدود میں قائم سرکاری ھاسٹل میں رہائش پذیر گورمینٹ ٹیچرز دور دراز کے علائقوں سے تعلیم حاصل کرنے والی طلبہ کو اسکو کی پرنسپل کی جانب سے ھاسٹل خالی کرنے کے احکامات جاری کردیئے گئے۔ ھاسٹل میں واٹر سپلائی کی لائن بند کردی گئی ھاسٹل میں رہائش خواتین کو پینے کے پانی کی شدید دشواری کا سامنا۔ ھاسٹل میں رہائش ٹیچرز اور طلبہ نے میڈیا کے نمائندوں کو فون کرکے بتایا کہ گورمینٹ گرلز کالج ابن رشد کی پرنسپل پروفیسر شاھدہ پروین نے ھاسٹل میں رھنے والی ٹیچرز اور طلبہ کے ساتھ معتصبانہ رویہ اختیار کیا ہوا ہے اور ھاسٹل پر قبضہ کرنے خود اپنے خاندان کے ساتھ رھنے کی کوشش کر رہی ہے۔ اور مختلف بہانوں سے تنگ کررہی ہیں۔ انہون نے بتایا کہ یہ ھاسٹل جرنل خواتین ملازموں اور طلبہ کے لئے ہے اور ڈپٹی کمشنر کے ماتحت ہے لیکن پرنسپل اپنے غیر قانونی پاور استعمال کر کے انہیں بلیک میل کر رہی ہے۔ ھاسٹل میں رہائش پذیر گورمینٹ ٹیچرز اور طبلہ نے صوبائی وزیر تعلیم، سیکریٹری تعلیم ، کمنشر اور ڈپٹی کمشنر میرپورخاص سے انہیں تنگ کرنے اور ھاسٹل خالی کرانے کی دھمکیاں دینے پر پرنسپل گورمینٹ گرلز کالج ابن رشد کے خلاف کاروائی کا مطالبہ کیا ہے

0 comments

Write Down Your Responses