تھانہ فیکٹری ایریا کا ایس ایچ او خالد کلیا ر نے ریکارڈ یا فتہ گروہ سے سازباز کر لی،انصاف نہ ملا تو خود سوزی کرلوں گا ،محمد یاسین

فیصل آباد( سلیم شاہ ،چیف انوسٹی گیشن سیل ) تھانہ فیکٹری ایریا کے ایس ایچ او خالد کلیا ر نے بد نام زمانہ اور ریکارڈ یا فتہ گروہ کے سرغنہ یو سف رپھڑی سے سازباز کر کے ہما را گئیو شالا میں رہنا مشکل کر دیا ہے ،۔مجھے اور میرے اہل خانہ کو آئے روز مارمار کر زخمی کر دیا جاتا ہے۔پولیس کو امدادکے لئے کال کرتے ہیں تو ارباب اختیار کو بتایا جاتا ہے کہ بو گس کال ہے مجھ پر اغواء برائے تاوان کا جھوٹا مقدمہ درج کروا دیا گیا ان خیالا ت کا اظہار گئیو شالا مٹریاں کے رہائشی محمد یاسین نے فیصل آباد پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا مذید کہا کہ یو سف رپھڑی یوسف کوئیا ،حافظ ناصر ،سرو تمباکو والا فضل رحمان عبدالحق ساجد رحمان یا سر رحمان ،عاشق ادریس ،سلیم ،الطاف ، اویس،وسیم پر مشتمل چورو ں ڈکیٹوں اورقمار بازوں کے گرو نے میرا ڈیڑھ کروڑ روپے مالیت کا شیرہ چوری کیا تو میں نے صوبہ سندھ اور ڈجکوٹ میں مقدمہ درج کروادیا جب کہ یو سف رپھڑی گروہ نے تھانہ فیکٹری ایریا کے ایس ایچ خالد کلیا رکو بھاری رشوت دے کر مجھ پر جھوٹا مقدمہ درج کروادیا ۔مغوی کو پندرہ لاکھ دے کر برآمد بھی کر وا دیا ۔خالد کلیار تا حال تاوان لینے والا ملزم میرے جھوٹے مقدمہ میں ثابت نہیں کر سکا بلکہ ملزمان کی پشت پنائی کرتے ہوئے گزشتہ روز میرے گھر بجھوادیا ۔میرے بہنوئی امین بہن خدیجہ بی بی بھانجے آکاش کو مار مار کر زخمی کر دیا ۔تھانہ فیکٹری ایریا پولیس نے درخواست گزارنے کے باوجود نہ ہی مقدمہ درج کیا اور نہ ہی ملزمان کوپکڑنے کی کوشش کی ۔محمد یسنٰ نے کہا کہ وزیر اعلیٰ ،گورنر پنجاب ،چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ، آئی جی پنجاب ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ،آرپی او،سی پی او، ایس پی اقبال ٹاؤن تھانہ فیکٹری ایریا کے ایس ایچ او خالد کلیا ر کو ملزمان کی پشت پنائی کرنے پر فی الفور معطل کریں۔ بصور تیدگر ایک ہفتہ بعد میں اپنے اہل خانہ کے ہمراہ وزیر اعلیٰ پنجاب کے سامنے خود سوزی کرلوں گا۔ میرے ملزمان کو گرفتار کیا جائے اور مجھ پر درج کئے گئے جھوٹے مقدمہ کو خارج کیا جائے۔

0 comments

Write Down Your Responses