کراچی کی صنعتوں کو بجلی 8 روپے یونٹ جبکہ پنجاب کو 20 روپے یونٹ دی جارہی ہے، ریٹوں میں امتیازی سلوک سمجھ سے بالا تر ہے،انجمن تاجران ایکشن کمیٹی

فیصل آباد( سلیم شاہ ،چیف انوسٹی گیشن سیل ) چیئر مین آل پاکستان انجمن تاجران ایکشن کمیٹی وصدرنجمن تاجرا ن سٹی فیصل آ باد خواجہ شاہد رزاق سکا ،صوبائی صدر الحاج نواز وہرہ، قائدحاجی شیخ محمد بشیر، جنرل سیکرٹری چوہدری محمود عالم جٹ، سینئر وائس چیئر مین مرزا محمد صدیق بیگ ،سرپرست اعلی چوہدری غلام سروراور سینئر تاجر رہنماؤں حاجی اسلم بھلی ، شیخ فاضل، حاجی محمد عابد، رانا سکندر اعظم ،شیخ سعید ،چوہدری محمود احمد،جاوید ظفر، مرزااشرف مغل ، رانااکرام اللہ ، میاں آصف اسلم ، رانا ایوب منج ،شیخ سعید، چوہدری محمد بوٹا،شیخ فاروق اللہ والا،شیخ عبدالقیوم ، حاجی شمشاد ،حاجی سلیمان،شیخ عبدالوحید ببر،چوہدری اشرف گجر،شیخ نصیر یوسف وہرہ ، ملک شاہد رسول اور چوہدری خادم حسین ما ن نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ ملک میں تجارتی توازن درست نہیں حکومت ملکی صنعت وتجارت کی حوصلہ افزائی کرے تو نہ صرف غیرملکی قرضوں سے نجات مل سکتی ہے بلکہ ملک کی معیشت کو بھی مستحکم کیا جاسکتا ہے ملک بھر کے تاجر و صنعتکار میاں محمد نواز شریف کے دست و بازو بنکرموجودہ حکومت کو مضبوط بنانا چاہتے ہیں لیکن اسکے لئے حکومت کوملکی حالات کے پیش نظر ملک میں بزنس فرینڈلی ماحول مہیاکرنا اور ملکی تجارت کو بڑھانے کیلئے تاجروں کو ریلیف دینا ہوگا تونائی بحران کے سلسلہ میں پنجاب کی صنعتوں سے امتیازی سلوک ناقابل برداشت ہے موجودہ حکومت کو پا لیسی میکر زاور بیورو کریسی کی طرف سے پنجاب کے خلاف کی جانے والی سا زش کا نوٹس لینا ہوگا انہوں نے مطالبہ کیاپنجاب کی صنعتوں کو کراچی کے ریٹ پر بجلی فراہم کی جائے یہ زیادتی ہے کہ کراچی کی صنعتوں کو بجلی 8 روپے یونٹ جبکہ پنجاب کو 20 روپے یونٹ بجلی دی جارہی ہے انہوں نے کہا کہ ایک ہی ملک میں بجلی کے ریٹوں میں امتیازی سلوک سمجھ سے بالا تر ہے ایسا محسوس ہوتا ہے کہ پنجاب کو آج بھی سزا دی جارہی ہے پنجاب کے ارکان پارلیمنٹ کو چپ کا روزہ توڑ کرتاجروں کی حوصلہ افزائی کیلئے صوبہ بھر کے تاجروں صنعتکاروں سے ہونے والی زیادتیوں کے خلاف آواز اٹھائیں تاجر رہنماؤں نے یقین ظاہر کیا کہ وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کی حکومت سالہاسال کی عوامی محرومیوں کا ازالہ کرنے کیلئے ملک میں فرینڈلی بزنس ماحول مہیا کریگی جس سے صنعت کا پہیہ چلے گا لوگوں کو روز گار ملیگا اور ملکی معیشت مستحکم ہوگی ۔

0 comments

Write Down Your Responses