خیرپورٹامیوالی کے نواحی چکری دریا کنارے تین خانہ بدوش لڑکیوں سے پانچ آفراد کی گن پوائینٹ پر اجتماعی زیادتی پولیس مقدمہ درج کرنے سے انکار کردیا

خیرپورٹامیوالی( ایم وی این نیوز انویسٹی گیشن ٹیم ) خیرپورٹامیوالی۔کے نواحی چکری میں دریا کنارے ایک شادی میں آنے والی تین خانہ بدوش لڑکیوں کو گن پوائنٹ پر پانچ افراد نے زبردستی باری باری گینگ ریپ کا نشانہ بنا ڈالا متاثرین چیختی پکارتی رہیں پولیس نے مقدہ درج کرنے سے انکار کردیا گینگ ریپ کا نشانہ بنانے والے ملزمان کو بااثر شخصیات کی پشت پناہی حاصل ہے متاثرہ لڑکیوں نے چیف جسٹس سپریم کورٹ سے فی الفور نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے بصورت دیگر ڈی پی او بہاول پور آفس کے سامنے خود سوزی کی دھمکی دی ہے تینوں لڑکیاں 25سالہ زرینہ زوجہ اللہ رکھابھٹی۔22سالہ حسینہ مائی زوجہ اچھو بھٹی۔22سالہ صوبیہ زوجہ محمد صفدر بھٹی تحصیل کہروڑپکا ابن پیر کی رہائشی ہیں جو کہ خانہ بدوش ہیں اور شادیوں پر جاکر گانے بجانے کا کام کرتی ہیں یے لڑکیاں چکری کے رہائشی نوز سیال کی شادی پر آئی تھیں رات کو ایک کمرے میں جب سونے کیلئے گئیں تو وہاں پر موجود ذولفقار نامی شخص اپنے چار اور مسلح ساتھیوں سمیت موجود تھا جنہوں نے گن پوائینٹ پر زبردستی ان لڑکیوں کو پکڑا اور باری باری گینگ ریپ کا نشانہ بناتے رہے پولیس خیرپورٹامیوالی نے مقدمہ درج نہ کیا ہے

0 comments

Write Down Your Responses