دونوں ٹانگوں سے معذور محنت کش کو حکومت کی طرف سے سر چھپانے کی جگہ نہ مل سکی

لیاقت پور (انویسٹی گیشن ٹیم ) دونوں ٹانگوں سے معذور محنت کش کو حکومت کی طرف سے سر چھپانے کی جگہ نہ مل سکی ،مایوسی اور ناامیدی میں گھرا شہری پریس کلب لیاقت پورپہنچ گیا ،تفصیل کے مطابق محلہ سید انور شاہ ایڈووکیٹ میں کرایہ کے مکان میں رہائش پذیر دونوں ٹانگوں سے معذور محمد رفیق نے کئی سال پہلے خادم اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کو درخواست دی تھی کہ وہ اپنی مجبوری اور معذوری کے باوجود محنت مزدوری کر کے اپنے بیوی بچوں کی اور ضعیف والدہ کا پیٹ پالتا ہے کرایہ کی مد میں اسے ہر ماہ بھاری رقم ادا کرنی پڑتی ہے جس کے بعد گھر میں نوبت فاقوں تک آجاتی ہے اس لیے اسے لیاقت پورشہر یا قریبی سرکاری اراضی سے رہائش کے لیے پلاٹ دے دیا جائے مگر خادم اعلیٰ کی طرف سے رپورٹ کے لیے آنے والی درخواست بیوروکریسی کے سرخ فیتہ اور روائتی بہانہ بازی کی نذر ہو جاتی ہے حکومت اور حکمرانوں سے مایوس ہو کر محمد رفیق گزشتہ روز اپنی وہیل چےئر پر پریس کلب لیاقت پور پہنچا اور اپنی جسمانی معذوری و مالی تنگ دستی بارے آگاہ کیا ،اس کا کہنا تھاکہ وہ بھیک مانگنے کی بجائے رزق حلال کما کر اپنے خاندان کو معاشرے میں باوقار مقام دینا چاہتاہے مگر حکومت اس کا ہاتھ تھامنے کو تیار نہیں ،محمد رفیق نے بتایاکہ وہ وزیر اعلیٰ کے دورہ لیاقت پور کے دوران ان سے ملاقات کے لیے بھی گیا تھا مگر سیکورٹی حکام نے اسے دھکے دے کر وہاں سے بھگا دیا اب اسکی درخواستوں پر بھی کوئی عمل درآمد نہیں ہو رہا ،محمد رفیق نے وزیر اعظم پاکستان میاں نواز شریف ،وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف ،کمشنر بہاولپور اور ڈی سی او رحیم یارخان سے اپیل کی ہے کہ اس کے جائز حق کے لیے اسکی معاونت کی جائے ۔

0 comments

Write Down Your Responses