سوشل سکیورٹی ہسپتالوں میں سہولیات ناپید ‘ ڈاکٹرز و عملہ نے اپنے اپنے پرائیویٹ کلینکس آباد کر لئے

بہاول پور (انویسٹی گیشن ٹیم) سوشل سکیورٹی ہسپتالوں میں سہولیات ناپید ‘ ڈاکٹرز و عملہ نے اپنے اپنے پرائیویٹ کلینکس آباد کر لئے ‘سوشل سکیورٹی کے ہسپتالوں میں ڈاکٹرز و سٹاف کے ٹائم نہ دینے کی وجہ سے مریض خوار ‘ مزدور طبقہ صحت جیسی بنیادی سہولت سے عاری ہو گئے ‘ صورت احوال کی اصلاح کا مطالبہ ۔ تفصیل کے مطابق بہاول پور کے سوشل سکیورٹی ہسپتالوں کا نظام بری طرح درہم برہم ہو گیا ‘ ہسپتالوں میں ڈاکٹرز و سٹاف کی کمی کے باعث مزدور طبقہ کے مریض خوار ہو گئے ۔ بتایا جاتا ہے کہ بہاول پور کے ان سوشل سکیورٹی ہسپتالوں میں سہولیات نا پید ہیں اور کسی بھی قسم کے فوری نوعیت کے کیسز کودور دراز کے ہسپتالوں میں ریفر کر دیا جاتا ہے جبکہ متعدد ہسپتالوں کی ایمبولینسز بھی خراب کھڑی ہیں جسکی بھی وجہ سے مزدور طبقہ کو اپنے مریض دوسرے ہسپتالوں کی جانب لے جانے کیلئے بھاری کرایوں کو ادا کرنا پڑتا ہے ۔ یہ بھی بتایا جاتا ہے کہ بہاول پور کے ان سوشل سکیورٹی ہسپتالوں میں ڈاکٹرز و دیگر سٹاف اپنے اپنے پرائیویٹ کلینکس میں پریکٹس کرنے میں مصروف ہوتا ہے جبکہ ان ہسپتالوں کے ڈسپنسرز و دیگر عملہ سر شام ہی اپنے گھروں یا مختلف دیہی علاقوں میں عطائیت کو پروان چڑھانے میں مصروف ہو جاتا ہے اور یہ ہی نہیں ان ہسپتالومیں ڈاکٹرز و سٹاف کی ٹائم نہ دینے سے مزدور طبقہ کے مریض صحت کی بنیادی سہولیات سے محروم رہ جاتے ہیں ۔ سوشل سکیورٹی سے رجسٹرڈ مزدوروں نے وزیر اعلیٰ پنجاب اور سیکرٹری صحت سے بہاول پور کے ان سوشل سکیورٹی ہسپتالوں میں سہولیات کی فراہمی سمیت دیگر امور کی فوری درستگی کا مطالبہ کیا ہے ۔

0 comments

Write Down Your Responses