بہاولپور کو دوبارہ پاکستان کا گریٹ صوبہ بنایا جائے

بہاول پور (انویسٹی گیشن ٹیم) بہاولپور صوبہ بحالی کیلئے افرادی قوت کا اتحاد نا گزیر ہے ۔ چولستان کے اثاثوں ،وسائل ،معدنیات سمیت 68لاکھ بے آب اراضی کو بروکار لاتے ہوئے بہاولپور کو دوبارہ پاکستان کا گریٹ صوبہ بنایا جائے ۔ ان خیالات کا اظہار F.S.Aورلڈ گروپ کمپنیز کے چےئر مین مسعود ملک نے اپنی رہائش گاہ پر متحدہ تحریک بحالی صوبہ بہاولپور کے مرکزی سیکرٹری جنرل قاری مونس بلوچ اور انکے ہمراہ محمد عباس گوندل ایڈووکیٹ ، شہاد ت یار خان ایڈووکیٹ ، سردار احمد خان رند اور دیگر سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا 1970 ء میں بہاولپور صوبہ کی کامیاب تحریک کو ناکام بنانے والو ں نے نہ صرف عوام کے ولولہ انگیز جذبوں کو نقصان پہنچایا بلکہ گریٹ بہاولپور صوبہ سے پاکستان کو محروم کر دیا ۔ مسعود ملک نے کہا بہاولپور صوبہ بحالی کا مطالبہ عوامی اور آئینی ہے لیکن پیشہ ور سیاستدانوں نے بہاولپور کے آئین اور قانون پسند عوام کو حقوق دلانے کے بجائے فاصلے پیدا کر دیے ۔ انہوں نے کہا بہاولپور صوبہ بہاولپور کی ڈیڑھ کروڑ عوا م کا بنیادی حق نادر اثاثہ اور لا زوال معاشی ،اقتصادی ، صنعتی اور زرعی خزینہ ہے لیکن ملک کے غاصب مافیہ غالب آچکا ہے اسے کنارے لگانے کیلئے افرادی قوت کا اتحاد انتہائی ضروری ہے ۔مسعود ملک نے کہا بہاولپور کے عوام متحد ،متحرک اور متفق ہیں لیکن سیاستدان مفادوں کی گود میں اٹھکھیلیاں کھیل رہے ہیں ۔

0 comments

Write Down Your Responses