آئندہ چند ماہ میں یونیورسٹی زرعی کالج کی عمارت کی تکمیل سے جنوبی پنجاب میں زرعی تحقیق کا پہلا جدید مرکز قائم ہو جائے گا

بہاول پور (ایم وی این نیوز ) پروفیسر ڈاکٹر محمد مختار وائس چانسلر اسلامیہ یونیورسٹی بہاولپور نے کہا ہے کہ آئندہ چند ماہ میںیونیورسٹی زرعی کالج کی عمارت کی تکمیل سے جنوبی پنجاب میں زرعی تحقیق کا پہلا جدید مرکز قائم ہو جائے گا جس سے مقامی زراعت کو فروغ حاصل ہوگااورایسے زرعی سائنسدان پیدا ہوں گے جو مقامی جغرافیائی اور موسمی حالات سے آگاہی کی بدولت فصلوں کی زیادہ موثر اور کامیاب اقسام کے تعارف کے ساتھ ساتھ زرعی مسائل کا زیادہ بہتر حل تجویز کر سکیں گے جو جنوبی پنجاب کی زرعی معیشت کے لیے ایک بڑا قدم ہو گا ۔ ہمارے زرعی ماہرین اور طلبہ وطالبات اپنی تحقیقی سرگرمیوں کے ذریعے فصلوں کی ایسی اقسام دریافت کرر ہے ہیں جو عالمی ماحولیاتی اور موسمی تبدیلیوں کا مقابلہ کرنے کے ساتھ ساتھ مقامی خطے میں بھی انتہائی موثراور کامیاب ہیں ۔یونیورسٹی زرعی کالج کے طلبہ وطالبات کی زرعی مصنوعات کی نمائش اور ویلیو ایڈیشن کے ذریعے نت نئے منصوبوں کی تجاویز پرعمل درآمد ہماری زرعی معیشت میں قابل قدر تبدیلیوں کا موجب ہو گی ۔انہوں نے یونیورسٹی زرعی کالج میں طلبہ وطالبات کی جانب سے لگائی گئی ایگری بزنس نمائش اورزرعی فارم کا دورہ بھی کیا۔ یونیورسٹی زرعی کالج کے سائنسدان ڈاکٹر اقبال بندیشہ نے اپنی بریفنگ میں بتایا کہ گزشتہ دوسالوں سے وائس چانسلر کی خصوصی دلچسپی اور رہنمائی کی بدولت زرعی کالج میں جاری تحقیقی سرگرمیوں میں تیزی آئی ہے اور انتہائی مختصر عرصے میں کپاس کی دوبی ٹی اقسام IUB-222اور MM-58اورایک نان بی ٹی IUB-11تیارکی ہیں۔ یہ دونوں اقسام اپنی پیداواری صلاحیت اور جنوبی پنجاب کے موسمی اور جغرافیائی حالات میں انتہائی موضوع ہیں ۔کپاس کی قسم IUB-222کی مارکیٹنگ کا آغازکر دیا گیا ہے اور تمام کسانوں کے لیے آئندہ کاٹن سیزن میں دستیاب ہوگی۔ جبکہ MM-58انتہائی کامیابی سے تجرباتی مراحل سے گزر رہی ہے ۔ اس موقع پر بتایا گیا کہ یونیورسٹی زرعی فارم میں چاول کی 80سے زیادہ اقسام پربھی تحقیق اور تجربات جاری ہیں ۔ اس کے علاوہ یونیورسٹی زرعی فارم میں ہرنوں اور دوسرے مقامی جانوروں اور پرندوں کی افزائش نسل کا مرکز قائم کیا گیا ہے اور فش فارم اور گوشہ گلا ب نے یونیورسٹی زرعی فارم کی خوبصورتی میں چارچاند لگا دئیے ہیں۔ایگری بزنس نمائش میں طلبہ وطالبات نے زرعی مصنوعات کے مختلف کاروباری منصوبوں کو انتہائی جدت اورخوبصورتی سے پیش کیا۔ اس موقع پر کم بیجوں والے ٹماٹر اور اُن سے بنائی گئی کیچپ، یونیورسٹی زرعی فارم کے تازہ پھلوں سے تیارہ شدہ انرجی ڈرنکس، معمر افراد کے لیے تیار کیے گئے سپیشل چاکلیٹ کیک ، فاضل زرعی مواد سے تیار کردہ مصنوعات اورمتنوع اقسام کے پھولوں سے سجے سٹالز مہمانوں اور طلبہ وطالبات کی خصوصی توجہ کا مرکز رہے۔ معزز مہمانوں نے طلبہ وطالبات کی محنت ، لگن اور صلاحیت کو بے حد سراہا اور کہا کہ حکومتی اور نجی اِداروں کو ان طلباء کی سرپرستی کرتے ہوئے ان کی پیش کردہ کاروباری تجاویز کو عملی شکل دینے میں حوصلہ افزائی کرنی چاہیے اورEntrepreneurship کے جذبہ کی بھرپور حوصلہ افزائی کرنی چاہیے۔ اس موقع پر پرنسپل یونیورسٹی زرعی کالج ڈاکٹر معظم جمیل ، سینئر پروفیسر ڈاکٹر عبد الجبار اور ڈائریکٹر سٹوڈنٹس آفےئرز ڈاکٹر تنویر حسین بھی موجود تھے۔ 

0 comments

Write Down Your Responses