ملکی بقا اور سلامتی کیلئے ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ محرم الحرام کے ایام میں مذہبی رواداری اور بھائی چارے کی فضا کو قائم کرے :صوبائی وزیر سپیشل ایجوکیشن

وہاڑی(انویسٹی گیشن ٹیم) صوبائی وزیر سپیشل ایجوکیشن آصف سعید خان منیس نے کہا ہے کہ ملکی بقا اور سلامتی کیلئے ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ محرم الحرام کے ایام میں مذہبی رواداری اور بھائی چارے کی فضا کو قائم کرے کیونکہ امن معاشرے کے کسی ایک فرد کی نہیں بلکہ پورے معاشرے کے ضرورت ہے اس لیے معاشرے کے ہر فرد کی ذمہ داری ہے کہ امن کے لیے رواداری ،ہم آہنگی ،برداشت کا مظاہرہ کرے یہ بات انہوں نے ڈی سی او وہاڑی کے کمیٹی روم میں ڈسٹرکٹ کوارڈینیشن آفیسر جواد اکرم ،ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر صادق علی ڈوگر کے ہمراہ ضلعی امن کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔اجلاس میں ڈی ایس پی صدر سرکل وہاڑی شاہد نیاز، ڈی ایس پی انویسٹی گیشن مختار جوئیہ ، ایس ڈی پی او بوریوالا آصف احمد بگھیو،ڈی او سول ڈیفنس محمد حنیف قادری، ممبران امن کمیٹی حافظ ادریس ضیاء ، قاری محمد طیب، ، محمد جمیل بھٹی ، میاں ساجد آصف، چودھری محمد سرور، قاری مرتضے، مولانا محمد امین ، محمد الطاف آف میلسی،سید مشتاق بخاری ،غلام عباس ہادی ، سید الطاف حسین شاہ ، مفتی محمد معصب، محمد انور چودھری ، شیخ محمد سلیم ، عبدالطیف، منور حسین بھلر، ماسٹر ریاض مسیح،فرازا لحق بھٹی، ارشادحسین بھٹی ، عبدالخالق وٹو ،ڈسٹرکٹ چیف وارڈن سول ڈیفنس و صدر وہاڑی پریس کلب شیخ خالد مسعودساجداور ملک تنویر احمد بھارہ بھی شریک تھے ۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر آصف سعید خان منیس نے کہا کہ ملکی حالات اس بات کے متقاضی ہیں کہ ہم اپنے فروعی اختلافات کو بھلا کر اتحاد، یگانگت اور بھائی چارے کو فروغ دیں انہوں نے کہا کہ نواسہ رسولﷺ حضرت امام عالی مقام حسین ابن علیؓ نے کربلا کے میدان میں بھی صبر، برداشت اور حوصلے کی لازوال مثال قائم کی ہے اور رہتی دنیا تک مسلمانوں بلکہ پورے عالم کے لیے سیدنا امام حسینؓ کا عمل ایک قابل تقلید روشن مثال ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں اسوہ حسینیؓ پر عمل کرتے ہوئے اپنے معاشرے اور ملک میں امن قائم رکھنا ہے اور امن کی خاطر اپنی انا اور اختلافات کو قربان کرنا ہے انہوں نے کہا کہ ضلعی انتظامیہ کی طرف سے تمام تر حفاظتی انتظامات مکمل ہیں لیکن اس کے باوجود تمام مکتبہ فکر کے علماء کرام اور نمائندہ افراد بھی اپنی روایتی رواداری اورذمہ داری نبھاتے ہوئے اپنے اپنے علاقوں میں جلوسوں کے ہمراہ رہیں ۔اجلاس میں حافظ ادریس ضیاء نے بتایا کہ مسجد باغ والی وہاڑی کی انتظامیہ نے تعاون کرتے ہوئے عاشورہ محرم کے جلوس عزادری کے لیے نماز جمۃ المبارک کے وقت میں 45منٹ کی کمی کی ہے۔محمد الطاف کی نشاندہی پر صوبائی وزیر نے ضلعی انتظامیہ کو ہدایت کی کہ وہ رکشوں میں ٹیپ ریکارڈر اتروانے کے لیے فوری مؤثر کارروائی کریں،اجلاس میں علماء کرام کی نشاندہی پر صوبائی وزیر نے تمام مکاتب فکر سے اپیل کی کہ وہ اختلافی اور دلآزار سے نعروں سے گریز کریں تاکہ ہم آہنگی کی فضا قائم رہے

0 comments

Write Down Your Responses