ہارون آباد میں دس محرم الحرام میں پولیس نے سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے

ہارون آباد (انویسٹی گیشن ٹیم) ہارون آباد میں دس محرم الحرام کا مرکزی جلوس مرکزی امام بارگاہ سے برآمد ہو کر اپنے روایتی راستوں سے ہوتا ہوا مرکزی امام بارگاہ پر جا کر اختتام پذیر ہوگیا ۔پولیس کی جان سے سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے ۔مرکزی جلوس امام بارگاہ سے تقریباً ساڑھے گیارہ بجے دوپہر کو برآمد ہوا اس دوران علم ،ذوالجناح اور تعزیئے برآمد بھی ہوتے رہے ۔جلوس عزادرواں کے علاوہ خواتین اور بچے بھی بڑی تعداد میں موجود تھے ۔اس قبل مرکزی امام بارگاہ میں مرکزی مجلس سے علامہ مظہر حسین نقوی نے حق و باطل کے معرکے میں میں شہیدان کربلا پر ہونے والے مظالم کے مصائب بیان کئے ۔مرکزی جلوس مرکزی امام بارگاہ سے برآمد ہو کر اپنے روایتی راستوں جیل روڈ سے ہوتا ہوا فوارہ چوک مین بازار پہنچا جہاں جلوس کے شرکاء نے نماز ظہرین علامہ مظہر حسین نقوی کی امامت میں ادا کی ۔بعداز نماز عزاداروں نے علی علی مارکیٹ مین بازار میں سینہ کوبی اور زنجیر زنی کی ۔جلوس اپنے روایتی راستوں سے ہوتا ہوا شام سات بجے مرکزی امام بارگاہ میں پہنچ کر اختتام پذیر ہوگیا ۔اس موقع پر پولیس کی جانب سے سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے جلوس کے تمام راستوں میں جگہ جگہ سی سی ٹی وی کیمرے خفیہ طور پر نصب کئے گئے تھے جنکی مانٹرنگ کنٹرول روم میں کی جا رہی تھی ۔

0 comments

Write Down Your Responses