نابالغ بچہ منشیات کے مقدمہ میں ملوث

بہاول پور (ڈپٹی انچارج انویسٹی گیشن ) نابالغ بچے کو منشیات کے مقدمہ میں ملوث کرنے پر آر پی او کانوٹس ایس ایس پی ریجنل انویسٹی گیشن بیورو کو معاملہ کی انکوائری کرکے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت غلط مقدمات کااندراج کسی صورت برداشت نہیں کیاجائیگا ریجنل پولیس آفیسر بہاولپور شاہد حنیف نے تھانہ سٹی احمدپور شرقیہ کے اے ایس آئی خالد مجید کیخلاف ایک درخواست پر فوری طورپرتحقیقات کرکے رپورٹ طلب کی ہے جس میں کہاگیاتھاکہ27 ستمبر کو پولیس سٹی احمدپور شرقیہ نے بدنام زمانہ منشیات فروش جاوید طوطی کے گھر سٹلائٹ ٹاؤن احمدپور شرقیہ میں چھاپہ مارا تو جاوید طوطی نامعلوم شخص کو1115 گرام چرس دے رہاتھا لیکن پولیس کے اے ایس آئی خالد مجید نے جاوید طوطی سے ساز باز کرلی اور نہ تو اسے گرفتارکیا اورنہ ہی اس سے چرس خریدنے والے شخص کوگرفتار کیابلکہ موضع واہی قادر ڈنہ احمدپور شرقیہ کے زمیندار شبیراحمد اونڑ کے ملازم پندرہ سالہ جان محمدکو جو اس وقت جاوید طوطی سے اپنے مالک شبیراحمد اونڑ کی رقم لینے گیاہواتھا کو گرفتار کرکے اس کیخلاف چرس کی برآمدگی کاجھوٹامقدمہ درج کرلیا۔ جبکہ یہ واقعہ جاوید طوطی کے مکان پرپیش آیا لیکن پولیس کے اے ایس آئی نے جائے وقوعہ قبرستان سٹلائٹ ٹاؤن کابنایا اے ایس آئی مذکور نے جاوید طوطی سے ساز باز کرلی اور بھاری رقم لے کر اسے اوراس کے منشیات سپلائر کو کچھ نہ کہا معززین علاقہ نے نوعمر جان محمد کی بے گناہی کیلئے بیا ن حلفی داخل کرائے اورچشم دید گواہوں نے بھی جن میں سابق ناظم ‘ نائب ناظم کونسلر‘ نمبرداروغیرہ شامل ہیں نے جان محمد کی بے گناہی کاحلف دیا لیکن اے ایس آئی نے اپنی آنکھوں پررشوت کی پٹی چڑھالی اور کسی کوخاطرمیں نہ لاتے ہوئے نابالغ جان محمدکو حوالات میں بندکردیااوراس کیخلاف مقدمہ درج کرلیا۔ آر پی او نے درخواست کے مندرجات پر تشویش کااظہارکیااور انہیں سنگین الزامات قراردیتے ہوئے ایس ایس پی ریجنل انویسٹی گیشن بیورو سے تحقیقات کے بعدرپورٹ طلب کرلی۔ انہوں نے درخواست دہندہ غلام حسین جو نوعمربچے جان محمد کاوالد ہے کو تسلی دی کہ ان کیساتھ انصاف کیاجائیگا۔

0 comments

Write Down Your Responses