امریکی بحری بیڑے کی ایرانی کشتی پر فائرنگ

تہران (ایم وی این نیوز) امریکی بحری بیڑے نے خلیج فارس میں پٹرولنگ کرتی ہوئی ایرانی کشتی پر فائرنگ کردی، جس کے بعد دونوں ملکوں کے پہلے سے بگڑے ہوئے معاملات مزید سخت ہوگئے ہیں۔

ایرانی نیوز ایجنسی ’ ارنا‘ کے مطابق پاسداران انقلاب نے کہا ہے کہ گزشتہ ایک ہفتے کے دوران امریکہ نے دوسری بار خلیج فارس میں غیر پیشہ وارانہ اقدام اٹھایا ہے۔پاسداران انقلاب کی بحریہ ذوالفقار رجمنٹ نے ہفتہ کے روز ایک بیان میں کہا کہ امریکی سمندری جہاز نے گزشتہ دنوں ہوائی فائر کیا تھا اور آج (ہفتہ کو)انہوں نے پھر خلیج فارس کے درمیانی علاقے میں ایسا اقدام دوبارہ دہرایا ہے۔ 

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ امریکی بحری بیڑا یو ایس ایس نمٹز  (USS   Nimitz) اور ایک امریکی کشتی ایران کے سمندری تیل سٹیشن رسالت کے قریب آئے جس پر پاسداران انقلاب کے ذوالفقار رجمنٹ نے انتہائی قریب سے ان کی نگرانی شروع کردی۔ جس کے بعد امریکی بیڑے نے غیر ذمہ داری کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایرانی پٹرولنگ کشتیوں پر فائرنگ کردی تاہم اس معاملے میں کسی قسم کا جانی نقصان نہیں ہوا جبکہ اس دوران امریکی بحری بیڑہ بھی علاقے سے نکل گیا۔

0 comments

Write Down Your Responses