بھٹہ مزدوروں نے درپیش مسائل کے پیش نظر بھر پور احتجاجی ریلی نکالی اور دھرنہ دیا،انتظامیہ کی مسائل حل کرنے کی یقین دہانی

فیصل آباد (سلیم شاہ ،چیف انوسٹی گیشن سیل)بھٹہ مزدوروں کے دھر نے اور احتجاج ریلی نکالنے پر اُن کو درپیش مسائل کا جائزہ لیتے ہوئے ڈویژنل کمشنر سردار اکرم جاوید نے کہا کہ ڈویژن کے چاروں اضلاع میں بھٹہ خشت کے مزدوروں کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کئے جائیں گے اس سلسلے میں متعلقہ قوانین پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے گا۔ انہوں نے ہدایت کی کہ بھٹہ مزدوروں کو مقررہ یومیہ اجرت کی ادائیگی کے لیے عدالت عظمی کے احکامات کی تعمیل کی جائے۔ کمشنر نے لیبر افسران کو ہدایت کی کہ وہ چاروں اضلاع میں بھٹہ خشتوں کے باقاعدگی سے دورے کریں اور لیبر وسوشل سکیورٹی قوانین پر عملدر آمد نہ کرنے والوں کے خلاف ایکشن لیں۔ انہوں نے اضلاع میں ڈسٹرکٹ و یجیلینس کمیٹی کی میٹنگز کے دوران اب تک بھٹہ خشت مزدوروں کو درپیش مسائل کے ازالہ کے لیے کئے جانے والے اقدامات کی تفصیلات سے بھی آگاہ کرنے کی ہدایت کی۔ اس موقع پر بتایا گیا کہ ضلع فیصل آباد میں349 رجسٹرڈ بھٹے ہیں اور اب تک1114 سوشل سکیورٹی کارڈز جاری کر دئیے گئے ہیں جبکہ بقیہ 516 کارڈز تکمیل کے مراحل میں ہیں۔ لیبر افسران کے وزٹس کے دوران قوانین پر عملدر آمد نہ کرنے والے 40 کیسز کی نشاندہی ہوئی ہے جس پر مزید قانونی کارروائی کے لیے پیشرفت کی جارہی ہے۔ مزدور رہنماؤں نے بھٹہ خشت مزدوروں کو درپیش بعض مسائل سے آگاہ کرتے ہوئے زور دیا کہ انہیں ان کا حق ملنا چاہیے۔ اجلاس کے دوران بھٹہ خشت مزدوروں کے مسائل کے حل کی یقین دہانی کے بعد ضلع جھنگ اور ٹوبہ ٹیک سنگھ کے مزدوروں نے احتجاج کی کال واپس لے لی۔ایڈیشنل ڈسٹرکٹ کلکٹر محمدآصف چوہدری، ای ڈی او کمیونٹی ڈویلپمنٹ آصف تارڑ،اسسٹنٹ کمشنر(جنرل)مہرشفقت اللہ مشتاق، اسسٹنٹ کمشنر (سٹی) ظہیر انور جپہ، ڈائریکٹر سوشل سکیورٹی لیبر افسران کے علاوہ مزدور رہنما سرور باری ،اسلم ہراج اور دیگر بھی موجود تھے۔بعدازاں ڈی سی اونورالامین مینگل اور سی پی او ڈاکٹر حیدراشرف محکمہ لیبر کے دفتر کے سامنے بھٹہ مزدوروں کے دھرنا کے مقام پر گئے اور ان کے نمائندوں سے ملاقات کرکے یقین دلایا کہ ان کے حقوق کا پورا تحفظ کیا جائے گا جس پر مزدور وں نے احتجاجی دھرنا ختم کردیا۔

0 comments

Write Down Your Responses